Kanwal Shauzab’s response to allegations that he detained Journalist Batool Rajput

  • Whatsapp
Kanwal ShauzabKanwal Shauzab's response to allegations that he detained Journalist Batool Rajput's response to allegations that he detained Journalist Batool Rajput

Kanwal Shauzab response:

اپنی مرضی سے انڑویو کرنے کی اور سوالوں کو اپنی مرضی کیمطابق رخ دینے کی کوشیش اور جب یہ کہا کہ میں انٹرویو دینا نہیں چاہتی برائے مہربانی اسکو ڈلیٹ کر دئیں تو محترمہ نے بلیک میل کرنا شروع کر دیا انکے پروڈیوسر نے کہا کہ MNA ہو دماغ ٹھنڈا کرو ورنہ FIR کٹوا دونگا
یہ ہیں کہ صحافی

Translated from Urdu by

Read More

Trying to interview her voluntarily and asking questions as she pleases and when she said I don’t want to be interviewed please delete it, she started blackmailing. Her producer said MNA is cool. Do it, otherwise I will deduct the FIR
These are the journalists

یہ ہے صحافت اور یہ ہے مافیا گھر گھس کر چائے پانی پی کر بلیک میل کرتے ہیں کیونکہ جو دل میں آئے چلائیں
پیمرا میں درخواست دے رہی ہوں ایسے صحافی مافیا سے اللہ بچائے جو اپنی پرانی تکالیف اسطرح بلیک میل کرکے نکالتے ہیں

آپ نے بغیر تحقیق کئے یہ الزام لگا دیا کہ آپکے گینگ کی رکن بتول راجپوت جنکو گھٹیا صحافت کیوجہ سے پہلے بھی چینلز نے نکال دیا تھا انھیں میں نے حبس بے جا میں رکھا اس کو آزادی صحافت کہیں گے؟ نوبت یہ ہے کہ اب آپ لوگوں کو گھروں میں گھس کر بلیک میل کریں گے اغوا کا الزام لگا دیں گے؟

میڈیا کا لیٹ فارم ہمیں بدنام کرنے کیلئے ہم استعمال نہیں ہونے دیتیں گے۔ رضی دادا جیسوں کے حق کی آواز آپ بنتے رہے ہیں پر حق کیا ہے اس کا آپکو معلوم نہیں آپ کیلئے صحافی کا لائسنس لوگوں کی عزتیں اچھالنے کیلئے کافی ہے

بتول راجپوت صاحبہ آپ نے الزام لگایا ہے کہ میں نے آپکو حبس بے جا میں رکھا آپنے سستی شہرتںکیلئے انتہائ گھٹیا راستہ اپنایا اور صحافیوں کا وہی ٹولہ جو رضی دادا جیسوں کیلئے آواز اٹھاتا ہے آپکے ڈرامے کے سپورٹر بنے
+92 321 9971908 for location check
Translated from Urdu by
Batool Rajput Sahib, you have accused me of keeping you in confinement and taking a very bad path for your cheap fame and the same group of journalists who raise voice for people like Razi Dada became supporters of your drama.
+92 321 9971908 for location check

کل کی پیشی کے بعد مجھے پورا یقین تھا کہ ایسا حملہ مجھ پر ہوگا
پر میں اسکا بھرپور جواب دونگی میڈیا کو بلیک میلنگ کیلئے استعمال نہیں کیا جاسکتا آپ گھروں میں گھس کر حملے کریں یہ نہیں ہو سکتا

شکر ہے کی میں میل MNA نہیں ورنہ کوئ بعید نہیں کہ یہ محترمہ مجھ پر کوئ اور الزام بھی لگا جاتیں انکو پیش کی گئ چائے ابھی تک پڑی ہے اب ان پر ہتک عزت کا رقبہ کرواؤں گی تو پھر آزادی صحافت پر حملہ ہو جائے گا
اور میڈیا پر قدغن کا ڈرامہ بھی
کوئ جج صاحب سے پوچھ کر بتائے کہ میں کیا کروں

@HamidMirPAK sb
آپ پولیس لیکر میرے گھر تشریف لے آتے تو دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہو جاتا ؟ ان محترمہ کو سمجھائیں کہ اگر کوئ انٹرویو نہ دینا چاہے اور کہے کہ آپ نے جتنا انٹرویو کیا ہے یہ ڈلیٹ کر دئیں میں آپکے چینل کو انٹرویو نہیں دینا چاہتی اور آپ کہیں کہ نہیں ہم چلائیں گے تو؟
Translated from Urdu by
@HamidMirPAK sb
If you had come to my house with the police, there would have been milk and water? Explain to this lady that if someone doesn’t want to give an interview and says delete as many interviews as you have done, I don’t want to give an interview to your channel and you say no, we will run?

کیا یہ آزادئ صحافت ہے؟ پھر آپ کہیں کہ یہ انٹرویو میری پراپرٹی ہے میری مینجمنٹ سے بات کریں آپ ایک MNA آپکو کیا مسئلہ یہ میرا رائیٹ ہے
انکو صرف اتنا کہا کہ بہن مزید انٹرویو نہیں دینا اور نہ آپکے چینل پر چلانا چاہتی ہوں مہربانی کر کے ڈلیٹ کر دئیں تو انھوں نے یہ تماشہ بنا لیا
Translated from Urdu by
Is this freedom of the press? Then you say that this interview is my property. Talk to my management. You are an MNA. What is your problem? This is my right.
All I told them was that I don’t want to give any more interviews and I don’t want to run it on your channel. Please delete it, then they made this spectacle.

Kanwal Shauzab’s response to allegations Video talk goes viral

Related posts

Leave a Reply

Your email address will not be published.