JUIF’s MNA Maulana Salahuddin Ayubi Married a 14 Years Old Girl

JUIF's MNA Maulana Salahuddin Ayubi Married a 14 Years Old Girl

QUETTA: Maulana Salahuddin Ayubi, a National Assembly member from JUI-F, has married a girl his granddaughter’s age. The girl is only 14 years old, police have started investigation.

Police say the 14-year-old girl from Chitral was married to Balochistan National Assembly member Maulana Salahuddin Ayubi, and they have launched an investigation.

Police launched an operation at the request of an organization working for the welfare of Chitrali women.

Chitral police have confirmed receipt of the application. Additional SHO Rehmat Azeem, the inquiry officer in the case, said that an investigation has been started into the case.

According to school records, the girl’s date of birth is September 2006, thus making her 14 years old.

According to the laws of the country, the minimum age for marriage is 16 years. Marriage to a girl below this age is a crime. If the marriage of a child under the age of 16 involves the consent of the parents or guardians, they too will be equally complicit in the crime, and in addition the groom and the witness will be considered accomplices in the crime.

Maulana Salahuddin Ayubi belongs to the JUI-F, is a member of the National Assembly from Balochistan and is currently part of Parliament.

کوئٹہ (آن لائن ) جے یو آئی ایف سے تعلق رکھنے والے رکن قومی اسمبلی مولانا صلاح الدین ایوبی نے اپنی پوتی کی عمر کی بچی سے شادی کرلی۔ لڑکی کی عمر صرف 14سال ہے، پولیس نے تفتیش شروع کردی۔

پولیس نے کہا ہے کہ چترال سے تعلق رکھنے والی 14 سالہ لڑکی کی شادی بلوچستان کے رکن قومی اسمبلی مولانا صلاح الدین ایوبی سے کرائی گئی ہے، جس پر انہوں نے تفتیش کا آغاز کر دیا ہے۔

چترالی خواتین کی فلاح و بہبود کے لیے کام کرنے والی تنظیم کی درخواست پر پولیس نے کارروائی شروع کر دی، کم عمری کی اس شادی کے خلاف چترالی خواتین کی فلاح و بہبود کے لیے کام کرنے والی تنظیم نے پولیس میں درخواست دائر کی تھی۔

چترال پولیس نے درخواست موصول ہونے کی تصدیق کی ہے۔ اس کیس کے انکوائری آفیسر ایڈیشنل ایس ایچ او رحمت عظیم کا کہنا ہے کہ اس کیس پر تفتیش شروع ہوچکی ہے۔

سکول ریکارڈ کے مطابق لڑکی کی تاریخ پیدائش ستمبر 2006 ہے اس طرح اس کی عمر 14 برس بنتی ہے۔

ملکی قوانین کے مطابق شادی کے لیے لڑکی کی کم از کم عمر کی حد 16 سال مقرر ہے، اس سے کم عمر بچی سے شادی جرم کے زمرے میں آتی ہے۔ 16 سال سے کم عمر کے بچی کے شادی میں اگر والدین یا سرپرست کی رضامندی شامل ہو، تو وہ بھی جرم میں برابر کے شریک ہوں گے اور اس کے علاوہ نکاح خواں اور گواہ بھی جرم میں معاون سمجھے جائیں گے۔

مولانا صلاح الدین ایوبی کا تعلق جے یو آئی (ف) سے ہے، وہ بلوچستان سے رکن قومی اسمبلی منتخب ہیں اور اس وقت پارلیمنٹ کا حصہ ہیں۔

Add comment

Enable referrer and click cookie to search for plugintheme